مقامی صحافی عاصم کھنڈو کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ ڈسٹرکٹ پولیس افسر خانیوال کی تھانہ نواں شہر پولیس میں کھلی کہچری کے چند گھنٹوں بعد پیش آیا- کھلی کہچری میں ڈسٹرکٹ پولیس افسر خانیوال محمد علی وسیم نے ضلع بھر سے ڈکیتی و رہزنی کی وارداتوں کو مکمل ختم کرنے کا دعوا کیا تھا

تھانہ نواں شہر میں ڈی پی او خانیوال کی کھلی کہچری جس کے چند گھنٹے بعد ڈاکوؤں کی لوٹ مار ہوئی

عاصم کھنڈو کبیروالہ – عابد میڈیکل اسٹور واقع سلار واہن کے مالکان گزشتہ شام 7 بج کر 30 منٹ پر گھر جانے کے لیے سٹور بند کرکے موٹر سائیکل پر نکلے تو محسن نگر روڈ پر کار اسٹینڈ کے پاس موٹر سائیکل پر سوار دو مسلح افراد نے ان کا راستا روکا اور گن پوائنٹ پر جامہ تلاشی لیکر 45 ہزار لوٹ کر چلتے بنے- تھانہ نواں شہر پولیس ڈاکوؤں کو تلاش کرتی رہی

مقامی صحافی عاصم کھنڈو کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ ڈسٹرکٹ پولیس افسر خانیوال کی تھانہ نواں شہر پولیس میں کھلی کہچری کے چند گھنٹوں بعد پیش آیا- کھلی کہچری میں ڈسٹرکٹ پولیس افسر خانیوال محمد علی وسیم نے ضلع بھر سے ڈکیتی و رہزنی کی وارداتوں کو مکمل ختم کرنے کا دعوا کیا تھا-

 رانا ذیشان نامی شخص کی فریاد 

بخدمت جناب وزیر اعظم عمران خان آئی جی پنجاب بمارے کیس پر بھی نظر ثانی کی جائے سخت نوٹس لیا جائے تھانہ اڈا بارہ میل تحصیل کبیروالا ضلع خانیوال میں اغوا مقدمہ نمبر 496 ایف آئی آرنمبر 177/20 درج ہے تین ماہ20 دن گزرنے کے بعد بھی ابھی تک یہ نہیں پتہ چل سکا کہ میری بہن زندہ ہے کہ مر گئی پولیس بھی کوئی کاپریٹ نہیں کر رہے الٹا ہمیں ذلیل و خوار کر رہی ہے پولیس کی نااہلی کی وجہ سے ابھی تک میری بہن کا کوئی پتہ نہیں چلا میں چار دفعہ ڈی پی او صاحب خانیوال کے پاس پیش ھو چکا ھوں پولس الٹا ہم سے تشویش کرنے کہ پیسے مانگتے ہیں اس پرچے کا مدعی میرا بھنیوی ھے وہ بھی پولس کہ ساتھ ساذ باز ھےمیری بہن کے چھ بچے ہیں سب سے بڑا بچہ بھی سال کا ہے میں لاہور کا رہائشی ہوں اور پتا نہیں کتنے چکر لگا چکا ہو ں خانیوال کہ رحم کی اپیل کی جاتی ہے کہ ہمیں انصاف مہیا کیا جائے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here